فاٹا پولیو خاتمے کے قریب تر ہوتا جا رہا ہے: ڈاکٹر جین مارک

چیئرمین ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ (پولیو) ڈاکٹرجین مارک اولیونے کہا ہے کہ فاٹا کی پولیوخاتمے کی جانب کا میابی قابل ستائش اورفاٹا کوکارکردگی برقراررکھنے کی کوشش جاری رکھنا ہو گی۔ کوآرڈینیٹر ای او سی فاٹا محمد زبیر جان کی سربراہی میں آج ایمرجنسی آپریشن سینٹرفاٹا اور فاٹا سیکرٹریٹ میں منعقدہ اجلاس میں ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ (ٹیگ) کے چیئرمین ڈاکٹر جین مارک اولیونے کہا کہ ہم پولیوخاتمے کے قریب تر ہوتے جا رہے ہیں اور فاٹا نے پچھلے دو سالوں میں قابل تعریف کارکردگی کا مظاہرہ کیا مگر اسے محتاط رہنے کی ضرورت ہے کیونکہ فاٹاکے اردگردعلاقوں میں وائرس اب بھی موجود ہے۔
اُنہوں نے فاٹامیں پولیوکیخلاف مہم کے معیارکو برقراررکھنے کی ضرورت پرزوردیا۔کوآرڈینیٹر ای او سی فاٹامحمد زبیر خان نے اس موقع پر شرکاء کو بتایاکہ پولیٹیکل انتظامیہ اورسیکیورٹی اداروں کے تعاون سے فاٹا کے ہر بچے تک رسائی اور پولیو قطرے پلوانے کو ممکن بنایاگیا ۔اُنہوں نے کہاکہ فاٹاٹیم نے پولیوویکسین مہم کے معیارکوبرقراررکھنے کیلئے مہمات کی نگرانی میں اضافہ کیا۔اُنہوں نے مزیدکہاکہ حفاظتی ٹیکہ جات کی کوریج کوبہتربنانے کیلئے بھی کوششیں کی گئیں۔
کوآرڈینیٹر ای او سی فاٹا محمد زبیر خان نے کہا کہ حفاظتی ٹیکہ جات کی کوریج میں بہتری لانے کے لئے فاٹا سیکرٹریٹ باجوڑایجنسی میں پائلٹ منصوبہ کی حکمت عملی تیار کر رہا ہے۔ اس منصوبہ پرکامیاب عملدرآمدکی صورت میں اسی حکمت عملی کے ساتھ سارے فاٹاکیلئے منصوبہ تیار کیا جائے گا۔ اُنہوں نے کہا کہ ان منصوبہ جات کی مدد سے نہ صرف پولیوبلکہ دیگربیماریوں کیخلاف بھی بچوں کوویکسین کے ذریعے محفوظ رکھنے میں مدد ملے گی۔
محمدزبیرخان نے مزید بتایا کہ کم کارکردگی والے علاقوں کا عالمی شراکت دار اداروں کی مدد سے تجزیہ کیا گیا اوربہتر ی کیلئے سفارشات متعلقہ پولیٹیکل انتظامیہ کیساتھ شرئیر کئے گئے تاکہ جنوری 2018 کی مہم میں ان علاقوں کی تعداد میں کمی لائی جا سکے۔ قبل ازیں ٹیکنیکل فوکل پرسن فاٹا ڈاکٹرندیم جان نے چیئرمین ٹیگ اورشرکاء کو فاٹاپولیو پروگرام کی حالیہ صورتحال کے بارے میں آگاہ کیا۔ اُنہوں نے بتایاکہ آج ایمرجنسی آپریشن سینٹر خیبرپختونخواہ اور افغانستان ٹیم کی تعاون سے شمالی کوریڈور کے لئے ایکشن پلان (Northern Corridor Action Plan)تیار کیا جا چکا ہے جو خیبرپختونخواہ اور افغانستان کے ساتھ ملے بارڈر پر واقع علاقوں اور ان سے گزرنے والے (دوران سفر) بچوں کو پولیو قطرے پلوانے میں بہتری لانے میں مدد دے گی۔ ٹیم لیڈ عالمی ادارہ صحت فاٹا ڈاکٹر حامد مومند نے پچھلے سالوں کا موازنہ کرتے ہوئے بتایا کہ فاٹامیں سرویلنس اور مہم کی نگرانی میں خاطرخواہ بہتری آئی ہے۔ اجلا س میں ڈپٹی لیڈ (RADS) عالمی ادارہ صحت ڈاکٹر عاصمہ علی، ڈپٹی کوآرڈینیٹر N۔Stopنیشنل ای او سی ڈاکٹر ممتاز لغاری، ڈپٹی ڈائیریکٹر ای پی آئی خیبر پختونخواہ ڈاکٹر اکرم شاہ، اسسٹنٹ ڈائریکٹر ای پی آئی ڈاکٹر عنایت الرحمان،ہیلتھ آفیسریونیسیف فاٹا ڈاکٹر عبدالقیوم اوردیگرمتعلقہ فاٹاحکام نے بھی شرکت کی ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں