سوکڑی کے دس دیہاتوں کے مشران کا ڈرین سسٹم کو خراب کرنے کے خلاف احتجاج

اقوام سوکڑی کے دس دیہاتوں کے مشران اور منتخب نمائندوں کا کچہری روڈڈرین سسٹم کی حد سے زیادہ گہرائی و اُنچائی کم کرنے کے خلاف احتجاج کی دھمکی دے دی ۔پانی کے بہاؤ کی صورت میں تمام تر نقصان کی ذمہ داری انتظامیہ پر ہوگی ۔ناظم سوکڑی ملک آفتاب خان کی قیادت میں سوکڑی کے مشران اور منتخب بلدیاتی نمائندوں نے بنوں کچہری روڈ پر احتجاجی مظاہرہ کیا ۔مظاہرے کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے ناظم سوکڑی ملک آفتاب علی خان نے کہا کہ بیوٹیفکیشن منصوبے کیلئے کچہری روڈ ویال پر ڈرین سسٹم بنایا گیا ہے جو پہلے محکمہ مال میں پانچ فٹ تھا اب ضلعی انتظامیہ نے ڈرین سسٹم کو کم کرکے پانچ سے دو فٹ کردیا ہے جو زیادتی ہے کیونکہ ویال پر اقوام سوکڑی کے دس دیہاتوں کے پانی کا بہاؤ ہے جس سے سوکڑی کے کئی دیہات پانی میں ڈوبنے کا خدشہ ہے ۔پہلے بھی سیلاب اور بارشوں سے یہاں پر زیادہ نقصان ہوا ہے جس میں کئی قیمتی جانیں ضائع ہوئیں اور اب بھی خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ مذکورہ ڈرین سسٹم پانی کا دباؤ برداشت نہیں کرسکتا ۔اُنہوں نے کہا کہ ڈپٹی کمشنر بنوں محمد علی اصغر مذکورہ ڈرین سسٹم کو کم کرنے کا نوٹس لیکر ملوث افسران کے خلاف کارروائی کریں بصورت دیکر اقوام سوکڑی کے مشران اور منتخب نمائندے مجبور ہوکر بنوں میرانشاہ روڈ کو بلاک کرکے احتجاجی دھرنا دیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں