بنوں کے چاروں صوبائی ، ایک قومی سیٹ علماء کرام کی امانت ہے: زاہد دُرانی

وفاقی وزیر ہاؤسنگ اینڈ ورکس کے فرزندزاہد اکرم درانی نے کہا ہے کہ بنوں جمعیت علماء اسلام کا گڑھ ہے عام انتخابات میں تبدیلی کے نام پر دھوکہ دینے والوں کو عوامی طاقت سے عبرتناک شکست دیں گے۔ خطے کی تعمیر وترقی اور میگاپراجیکٹس کی تکمیل دُرانی خاندان اور علماء کرام کے کارنامے ہیں۔ محالفین کے پاس عوام کی فلاح وبہود کیلئے کوئی پروگرام نہیں صرف جھوٹے اعلانات سے قوم کو دھوکہ دینے میں مصروف ہیں ۔بنوں کے چاروں صوبائی اور ایک قومی سیٹ علماء کرام کی امانت ہے اور بنوں کے عوام جے یو آئی کو ووٹ دینا قومی فریضہ سمجھتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار اُنہوں نے پی کے88ایمان کالونی اسماعیل خیل میں تقریب کے بعد اخباری نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر کاشف خان ،ڈاکٹر ناصر گل ،شاہ زیب خان ،حاجی گل رباز خان سمیت دیگر مشران علاقہ بھی موجود تھے ۔زاہد اکرم خان درانی نے مزید کہا کہ صوبائی حکومت نے بنوں کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا مگر اس کے برعکس وفاقی حکومت نے اکرم خان درانی کی سربراہی میں یہاں کی تعمیر وترقی اور بنیادی ضروریات زندگی کی فراہمی کیلئے اربوں روپے فنڈز منظور کئے ۔تاہم محالفین صرف جھوٹے اعلانات اور کھولے نعروں سے عوام کو ورغلا رہے ہیں میدان میں کچھ نہیں۔ اُنہوں نے کہا کہ بنوں ڈویژن جمعیت علماء اسلام کا گڑھ ہے۔ عام انتخابات 2018میں نام نہاد سیاسی مداریوں کو شکست فاش دیں گے اور بنوں کی سیاست سے ہمیشہ کیلئے آؤٹ کردیں گے۔ پی کے88کے عوام جمعیت علماء اسلام اور درانی خاندان سے والہانہ عقیدت رکھتے ہیں جسکی وجہ سے محالفین ابھی سے پریشانی کا شکار ہیں اور عوام انتخابات میں یقینی شکست دیکھ کر حواس باختہ ہوگئے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں