بنوں: 10,000لیٹرملاوٹ شدہ دودھ ، غیرمیعاری اشیاء برآمد، 4لاکھ 75ہزار روپے جرمانے

بنوں محکمہ صحت افسران کے مختلف بازاروں میں چھاپے ، درجنوں دکانداروں کوزائد المیعاد اشیاء رکھنے اور غیر معیاری و ناقص صفائی پر لاکھوں روپے جرمانہ کیا گیا ۔گزشتہ روز خیبر پختونخوا فوڈ سیفٹی اور حلال فوڈ اتھارٹی کے ڈائریکٹر جنرل ریاض خان محسود کی خصوصی ہدایت پر ضلع بنوں کے ڈپٹی ڈائریکٹر محمد اصف خان نے ٹیم کے ہمراہ بنوں ٹاؤن شپ سمیت شہر کے مختلف بازاروں میں اچانک چھاپے لگائے ۔اس دوران اشیائے خوردو نوش ،گوشت ،دودھ فروش ،جنرل سٹوروں ،ہوٹلوں کا دورہ کیا اور وہاں پر سامان کی جائزہ لیا گیا ہے جس میں10ہزار لیٹر کیمیکل ملاوٹ شدہ دود ھ برآمد ہونے پر دودھ قبضہ کر کے دکاندار کو ڈیڑھ لاکھ روپے ،بین القوامی کمپنیوں کی تیارکردہ جوسز کی برآمدگی پر دکاندار کو 50ہزار وپے ،ناقص صفائی اور غیر معیاری و مضر صحت اشیائے خورد ونوش پر ہوٹلوں اور بیکرز کو لاکھوں روپے جرمانہ کیا گیا ۔جبکہ غیر معیاری قلفے ملائی اور آئس کریم بنانے پر جرمانہ کرکے دکانات سیل کر دیئے گئے۔ اسی طرح کیمیکل ملاوٹ شدہ مصالحہ جات بنانے پر مصالحہ فروشوں کو بھاری جرمانہ کیا گیااور کل 4لاکھ 75ہزار روپے جرمانے کرکے قومی خزانے میں جمع کئے گئے ۔اس موقع پر ڈپٹی ڈائریکٹر آصف خان نے میڈیا کو بتایا کہ مضر صحت اشیائے خورد ونوش کی فروخت شہریوں کیلئے جان لیوا ثابت ہو سکتا ہے جس کی فروخت کی کسی صورت اجازت نہیں دی جائے گی۔ دکانداران صحت کے اصولوں کے مطابق کاروبار کریں جو بھی غیر قانونی کاروبار میں ملوث پایا جاتا ہے اسے کھڑی سزا دی جا ئے گی ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں